پاکستان کو آسٹریلیا کیخلاف مسلسل تیسری شکست ..قومی ٹیم میں2 تبدیلیوں کا امکان۔۔کن کھلاڑیوں کو موقع مل سکتا ہے؟ جانیں

دبئی(ویب ڈیسک) آسٹریلیا اور پاکستان کے درمیان چوتھا ون ڈے آج کھیلا جائے گا ،شعیب ملک سیریز گنوانے کے بعد جیت کے خواہاں ہیں جن کا کہنا ہے کہ دو مواقع باقی ہیں جن میں کامیابی مل گئی تو پھر ہماری جیب میں بھی کچھ ہوگا،شان مسعود کی جگہ عابد علی کو چانس ملنے کا امکان ہے۔پاکستان اور آسٹریلیا کے درمیان پانچ میچوں کی سیریز کا چوتھا ون ڈے آج

دبئی انٹرنیشنل سٹیڈیم میں کھیلا جائےگا ،اگرچہ تین،صفر سے کامیاب کینگروز نے سیریز پر اپنا قبضہ کرلیا ہے لیکن قائم مقام پاکستانی کپتان شعیب ملک کا کہنا ہے کہ ہر میچ اہمیت کا حامل ہوتا ہے اور چونکہ ان کے پاس ابھی دو مواقع باقی ہیں جن میں کامیابی مل گئی تو پھر ان کی جیب میں بھی کچھ ہوگا۔ان کا کہنا تھا کہ مجموعی سکور ان کے اپنے ہاتھوں میں تھا لیکن ابوظہبی میں کھیلتے ہوئے 250سے زائد کا سکور آسان نہیں ہوتا جبکہ اس بات پر بھی دھیان دیا جائے کہ وکٹیں بچا کر کسی بھی میچ کی گہرائی میں جا سکتے ہیں کیونکہ اسی طرح جیت کا موقع پیدا ہوتا ہے لیکن وہ ایسا نہیں کر سکے جبکہ آسٹریلیا کے فاسٹ باؤلر سیم اور سوئنگ کرنے میں کامیاب رہے۔انہوں نے ایک بار پھر وضاحت کی کہ وہ دستیاب تمام کھلاڑیوں کو آزما رہے ہیں تاکہ ورلڈ کپ سے قبل سلیکشن اور ٹیم انتظامیہ کے سامنے پوری تصویر واضح ہو جائے۔ چوتھے میچ میں بھی پاکستانی ٹیم کچھ تبدیلیوں کےساتھ میدان سنبھالے گی ، شان مسعود کی جگہ عابد علی کو موقع دیا جا سکتا ہے جبکہ فارم کی طرف سے مشکلات میں مبتلا محمد عامر کو بھی آزمایا جائےگا۔آسٹریلین ٹیم میں بھی کین رچرڈسن

کی واپسی کا امکان ہے، سیریز میں کامیابی کے بعد خوشی سے سرشار کپتان ایرون فنچ کا کہنا ہے کہ انکی ٹیم تسلسل کےساتھ کامیاب کرکٹ کھیل رہی ہے اور بنیادی چیزوں کی بہتری سمیت اس کی تعمیر ہو رہی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ ہر بار جب وہ بھارت اور پاکستان کو ان کی کنڈیشنز میں ہراتے ہیں تو انہیں اچھا لگتا ہے کیونکہ کینگرو بیٹسمین ماضی کے مقابلے میں اب سپن باؤلنگ کو زیادہ بہتر انداز سے کھیل رہے ہیں اور شراکتیں بھی اہم ہیں جن کی وجہ سے حریف ٹیم کو حاوی آنے کا موقع نہیں ملتا ہے۔آسٹریلین ٹیم نے پانچ میچوں کی سیریز میں چار مرتبہ کلین سوئپ فتح حاصل کی ہے اور ایرون فنچ پانچویں مرتبہ ایسی کامیابی پر نگاہیں مرکوز کر چکے ہیں۔