وزیر اعظم عمران خان نےآسٹریلوی صحافی سے رشوت طلب کیے جانیکا نوٹس لے لیا

لاہور(اردو نیوز) وزیر اعظم سیکریٹریٹ نے آسٹریلوی صحافی ڈینس فریڈ مین سے لاہور ایئر پورٹ پر تعینات اہکار کی جانب سے پیسے لیے جانے کی ویڈیو سامنے آنے پر تحقیقات کا حکم دیدیا-ڈینس فریڈمین پی ایس ایل2020ء کی کوریج کے لیے پاکستان آئے تھے اور میلبورن واپسی پر انہوں نے سوشل میڈیا ویب سائٹ ٹویٹر پر ایک ویڈیو میں بتایا کہ کیسے لاہور ایئر پورٹ پر ایک اہلکار نے ان سے پیسے مانگے اور انہیں افسوس ہے کہ انہوں نے اس صورتحال کو زیادہ بہتر طریقے سے ہینڈل نہیں کیا- ویڈیو میں انکا کہنا تھا کہ جب وہ ایئر پورٹ کے امیگریشن کائونٹر پر اپنے پاسپورٹ پر سٹیمپ لگوانے کے لیے لائن میں کھڑے ہوئے تھے جب ایک ایئر پورٹ اہلکارانکے پاس آیا اور انہیں ایک مختلف لائن کے سامنے لے گیا اور سیکنڈوں میں اس کا کام کروایا، وہ انکا سامان بھی لاؤنج میں لے گیا۔

ڈینس فریڈمین کے مطابق اس اہلکار نے ان سے پیسوں کا مطالبہ کیا اور کہا کہ ان کے پاس کسی بھی شکل میں جو بھی کرنسی ہے اور جتنی مقدار میں بھی ہے وہ اسے دیدے جس کے بعد انہوں نے اسے پیسے دے دیئے-ویڈیو میں ڈینس یہ کہتے نظر آرہے ہیں کہ انہیں اس اہلکار کو پیسے دینے پر افسوس ہے اور انہیں پیسے دینے کی بجائے متعلقہ حکام کو اس اہلکار کی کرپشن کی اطلاع دینی چاہیئے تھی۔

دوسری جانب وزیر اعظم عمران خان نے آسٹریلوی صحافی ڈینس فریڈ مین سے لاہور ایئر پورٹ پر تعینات اہکار کی جانب سے پیسے لیے جانے کی ویڈیو سامنے آنے پر تحقیقات کا حکم دیدیا ہے اور وزیر اعظم سیکریٹریٹ نے سیکریٹری ایوی ایشن ڈویژن سے رابطہ کرکے ایئرپورٹ عملے کو اس اہلکار کے خلاف محکمانہ کارروائی کی ہدایت کردی گئی ہے- ذرائع کے مطابق سی سی ٹی وی کیمرے کی مدد سے اہلکار کی شناخت عمران مظفر کے نام سے کرلی گئی ہے-