خواجہ صاحب غصہ نہ ہوں ہمیں بھی غصہ آتا ہے، پرویز خٹک کی خواجہ آصف کو وارننگ

اسلام آباد (اردو نیوز) وزیر دفاع پرویز خٹک نے مسلم لیگ ن کے رہنما اور سابق وزیر دفاع خواجہ آصف کو وارننگ دے دی۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ مسلم لیگ ن کے رہنما خواجہ آصف نے فاٹا کی نشستوں سے متعلق بل ہر دھواں دھار تقریر کی جس پر بعد میں وزیر دفاع پرویز خٹک نے اظہار خیال رکھتے ہوئے انہیں خبردار کیا کہ خواجہ صاحب غصہ نہ ہوں۔

ہمیں بھی غصہ آتا ہے۔آپ چیخیں گے توہم بھی چپ نہیں بیٹھیں گے۔کہیں ایسا نہ ہو کے کل ہم اپنے اسپیکر کے تحفظ کے لیے کھڑے ہو جائیں۔پرویز خٹک کے جملوں پر قومی اسمبلی میں اپوزیشن جماعتوں کی طرف سے احتجاج کیا گیا۔پیپلز پارٹی رہنما راجہ پرویز اشرف نے کہا کہ پرویز خٹک نے ہمارا اسپیکر پکارا۔کیا آپ پورے ہاؤس کے اسپیکر نہیں؟ پرویز خٹک کے الفاظ کو حذف کیا جائے۔

جس پر اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے واضح کیا کہ میں پہلے بھی کہہ چکا ہوں کہ میں پورے ایوان کا اسپیکر ہوں۔گذشتہ روز بھی قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران بہت شور شرابہ کیا گیا۔ جمعرات کے روز قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران خواجہ آصف کو بولنے کی اجازت نہیں دی گئی تھی اور مائیک مراد سعید کے حوالے کر دیا گیا تھا جس پر اپوزیشن بہت برہم ہوئی،قومی اسمبلی کے باہر انہوں نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے حکومت کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا اورکہا کہ سپیکر صاحب اگر آپ پر پریشر ہے تو آپ استعفیٰ دے دیں۔

اسی حوالے سے بات کرتے ہوئے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ سپیکر قومی اسمبلی اس رویے سے اپنا اعتماد کھو چکے ہیں اس لیے وہ اب استعفیٰ دے دیں۔ قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران خواجہ آصف کو بولنے کی اجازت نہیں دی گئی تھی اور مائیک مراد سعید کے حوالے کر دیا گیا تھا اور مراد سعید کے خطاب کے دوران اپوزیشن نے شور مچایا اور اس کے بعد فاقی وزیر برائے مواصلات مراد سعید نے کہا ہے کہ پارلیمنٹ میں حزب اختلاف کو صبروتحمل اور سنجیدگی کا مظاہرہ کرنا چاہیئے اورحکومتی ارکان کے موقف کو بھی سننا چاہیے۔