مال روڈ پر رکشوں کے داخلے پر پابندی کا فیصلہ مگر کب سے؟ خبر آ گئی

لاہور (ویب ڈیسک) صوبائی دارالحکومت کی انتظامیہ نے ٹریفک مسائل کے حل کیلئے مال روڈ پر رکشہ کے داخل ہونے پر پابندی لگانے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے جس پر آئندہ ماہ سے عملدرآمد شروع کر دیا جائے گا۔نجی خبر رساں ادارے ’لاہور نیوز‘ کے مطابق لاہور انتظامیہ نے سیف سٹی کے ساتھ مل کر شہر کے وسط میں واقع مال روڈ پر 12 گھنٹوں کیلئے رکشوں کے داخلے پر پابندی عائد کرنے کا بڑا فیصلہ کر لیا ہے جس کے مطابق پابندی کے وقت کے دوران رکشے مال روڈ کو کراس تو کر سکیں گے لیکن اس پر سفر کرنا ممنوع ہوگا۔

رپورٹ کے مطابق صبح 7 سے شام 7 بجے تک مال روڈ ہر قسم کے رکشوں کیلئے بند رہے گی جبکہ موٹر سائیکل رکشہ کے داخلے پر پہلے سے ہی پابندی عائد ہے۔ شہریوں نے لاہور انتظامیہ کے اس فیصلے پر ملا جلا ردعمل دیا ہے جن میں سے کچھ نے اس فیصلے کو بہتر قرار دیا ہے جبکہ بعض کا کہنا ہے کہ ان کو سفری مشکلات درپیش آئیں گی۔ذرائع کا کہنا ہے کہ لاہور کی مصروف اور معروف ترین شاہراہ مال روڈ پر رکشوں کے داخلے پر پابندی کی بڑی وجہ ٹریفک نظام کو بہتر کرنا ہے چونکہ رکشے سواری بٹھانے کیلئے کسی بھی جگہ رک جاتے ہیں جس کے باعث ٹریفک روانی متاثر ہوتی ہے اور مصروف اوقات میں تو ٹریفک جام جیسے مسئلے کا سامنا بھی کرنا پڑ جاتا ہے۔