ایف 16 گرانے کا دعویٰ، بھارت نے مبینہ رڈار کی تصاویر جاری کیں تو ڈی جی آئی ایس پی آر نے بھی دبنگ جواب دیدیا

نئی دہلی (ویب ڈیسک )پاکستان نے 27 فروری کو لائن آف کنٹرول کی خلاف ورزی کرنے والے دو بھارتی طیاروں کو مار گرایا اور ان کے ایک پائلٹ ابھی نندن کو گرفتار کر لیا جسے بعد ازاں کشیدگی کم کرنے اور امن کے قیام کیلئے وزیراعظم عمران خان نے فوری رہا کرنے کا اعلان کیا ۔تاہم بھارت اپنے دو طیارے گنوانے کے بعد بھی جھوٹا پراپیگنڈہ کرنے سے باز

نہ آیا اور بے بنیاد دعویٰ کرتے ہوئے کہا کہ ابھی نندن نے ایک پاکستانی ایف سولہ طیارہ گرایا ہے جس پر آئی ایس پی آر نے واضح اعلان کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان نے کارروائی کیلئے ایف سولہ طیارہ استعمال ہی نہیں کیے ہیں بلکہ یہ آپریشن جے ایف تھنڈرز نے کیاہے ۔بھارت مسلسل جھوٹ پھیلاتا رہا لیکن کوئی ثبوت پیش کرنے میں ناکام رہا تاہم پاکستان نے امریکی حکام کو پیشکش کی وہ پاکستان آئیں اور ایف سولہ طیاروں کی خود گنتی کر لیں تاہم چند دن پہلے فارن پالیسی نے ایک آرٹیکل شائع کیا جس میں انہوں نے بھارت کے دعوے کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے ایف سولہ طیارے پورے ہیں ۔

امریکی جریدے کی سچی رپورٹ سے بھارتی جھوٹ کو الف ننگا کر دیا جس کے بعد انہوں نے اپنے جھوٹ پر مزید ڈھٹائی کا مظاہرہ کرتے ہوئے اب جھوٹی اور خود ساختہ تصویریں تیار کر کے اپنی میڈیا کو ایک اور تسلی دیدی ہے تاہم ہوا میں چلائے گئے تیروں کا کوئی ہدف نہیں ہوتا اور وہ آخر کار واپس زمین پر ہی آ کر گرتے ہیں ایسا ہی کچھ بھارتی دعووں کے ساتھ بھی ہوا ۔بھارت کی جانب سے کی گئی جھوٹوں پر مبنی پریس کانفرنس کا ڈی جی آئی ایس پی آر میجر

جنرل آصف غفور نے زور دار جواب دیتے ہوئے کہا کہ ” بار بار بولنے سے جھوٹ سچ نہیں بن جاتا ۔“بھارتی فضائیہ کے اسسٹنٹ چیف ایئر وائس مارشل آر جی کے کپور نے بے بنیاد پراپیگنڈہ کرتے ہوئے کہا کہ ” بھارتی فضائیہ کے پاس ’پکے‘ ثبوت موجوت ہیں کہ 27 فروری کو بھارتی مگ طیارے نے پاکستان کا ایف سولہ طیارہ گرایا ہے ۔ بھارتی حکومت کا کہناہے کہ 27 فروری کو بھارتی پائلٹ ابھی نندن نے اپنے جہاز سے نکلنے سے قبل ہی پاکستانی طیارے کو مار گرایاتھااور وہ خود لائن آف کنٹرول کی دوسری جانب پیراشوٹ کے ذریعے جا گرے ۔

بھارتی فضائیہ نے دعویٰ کیا کہ دو پیرا شوٹ کھلتے ہوئے دیکھے گئے جن کا ریڈیو کمیونیکیشن کے ذریعے پتا لگا یا گیا ، جبکہ پاکستانی وزیراعظم عمران خان نے بھی کیمرے پر ایک سے زائد پائلٹس کا اشارہ دیا ۔جس سے یہ ثابت ہوتاہے کہ دو طیارے ایک ساتھ ہی ایک ہی علاقے میں تقریبا ایک سے ڈیڑھ منٹ کے وقفے سے گرے ہیں ۔بھارتی فضائیہ کے افسر نے کہا کہ ہمارے پاس ’ثبوت ‘ موجود ہیں لیکن ہم انہیں سیکیورٹی وجوہات کی بنیاد پر عوامی سطح پر جاری نہیں کر رہے ،بھارتی فضائیہ کی جانب سے رایڈار کی جھوٹی

تصویر شیئر کی گئی جس میں دکھایا گیا کہ ریڈار میں تین پاکستانی طیارے نظرآ رہے ہیں تاہم اچانک ایک طیارہ غائب ہو جاتاہے ۔بھارت کا یہ ثبوت کسی لطیفے سے کم نہیں ہے ۔بھارت کے اس دعوے پر پاک فوج کے میجر جنرل آصف غفور نے دبنگ پیغام جاری کرتے ہوئے کہا کہ بار بار بولنے سے جھوٹ سچ نہیں بن جاتا۔میجر جنرل آصف غفور نے کہا کہ یہ سچ ہے کہ پاکستان ایئرفورس نے2بھارتی جہازگرائے ،سب نے بھارتی جہازوں کاملبہ زمین پردیکھالیکن پاکستان نے اس سچ پر ڈھول نہیں پیٹا۔انہوں نے کہا کہ بھارت کہتا ہے ایف 16گرانے کا ثبوت ہے لیکن سامنے نہیں لاتے ،بار بار جھوٹ بولنے سے سچ نہیں بن جا تا۔