’’دنیا کی 2 سپر ایٹمی طاقتیں مل گئیں ‘‘ ” ہم اب چین کے ساتھ مل کر یہ خطرناک ترین جنگی ہتھیار تیار کرنے جا رہے ہیں “ پاکستان نے سب سے بڑا اعلان کر دیا ،بھارت کی ٹانگیں تھر تھر کانپنا شروع ہو جائیں گی

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان اور چین کے دفاعی تعلقات میں ایک اور اہم پیشرفت، جے ایف 17 تھنڈر طیاروں کے جوائنٹ وینچر کے بعد آبدوزوں کی مشترکہ تیاری کا بھی فیصلہ کرلیا گیا۔ پاکستان چین کے اشتراک سے میری ٹائم سکیورٹی کیلئے مزید 8 آبدوزیں تیار کرے گا۔ اس سے قبل پاکستان کی بحریہ کے زیر استعمال آبدوزوں کی زیادہ تعداد فرانس میں تیار ہوئی ہے۔ مقامی اخبار ” ایکسپریس ٹریبیون “ کے مطابق کراچی کے شپ یارڈ اور ڈارئریکٹر انجینئرنگ ورکس پراجیکٹ کموڈور محمد جہانزیب احسن نے کراچی میں جاری آئیڈیاز 2018 کی نمائش میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ” سب میرینز کی تیاری ایک سے ڈیڑھ سال میں شروع ہو جائے گی ۔“

کموڈور احسن کاکہناتھا کہ تمام آبدوزوں کا آدھا اور جدید حصہ چین میں تیار کیا جائے گا جبکہ باقی آدھے کی تیاری پاکستان میں ہو گی ۔پاکستان اور چین کے درمیان سب میرینز کی تیاری سے متعلق 2011 میں متعدد بار بات چیت ہو چکی ہے ۔دنیا میں سب سے زیادہ آبدوزیں رکھنے والا ملک شمالی کوریاہے جس کے پاس 86 سب میرینز ہیں ۔ دنیا میں دوسرے نمبر پر سب سے زیادہ سب میرینز چین کے پاس ہیں جو کہ 73 جبکہ سپر پاور امریکہ کے پاس 66 سب میرینز ہیں ۔یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ پاکستان نے اپنا ڈرون بھی تیار کر لیا تھا جس کا نام ’ براق ‘ رکھا گیا تھا اور اسے بھی 2018 کی آئیڈیاز نمائش میں پیش کیا گیا ہے ۔