سعودی عرب کا سی پیک میں شمولیت کا فیصلہ۔۔۔۔! دوست ملک گوادر میں کیا چیز تعمیر کرنے جا رہا ہے؟

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) وزیراعظم پاکستان عمران خان اپنے پہلے دورے سعودی کیلئے بروز منگل کو روانہ ہوں گے ۔ میڈیا اطلاعات کے مطابق وزیراعظم عمران خان دورہ سعودی عرب میں تیل کی ادائیگیوں کے موخر کرنے سے متعلق معاملے پر بات چیت ممکن ہے۔ تاہم سعودی عرب سی پیک منصوبے میں شمولیت کا ارادہ بھی کر چکا ہے ۔ حکومت سعودیہ نے پاکستان کو آسان شرائط پرساڑھے پانچ ارب ڈالر دینے کا بھی اعلان کیا ہے ۔ سعودی عرب سی پیک میں شامل ہونے کے بعد سرمایہ کاری سے گوادر میں آئل سٹی بنائے گا۔جب کہ سی پیک فیزٹو میں چین 42 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری پر رضامند ہو گیا ہے۔ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان کے دورہ چین میں رعایتی قرضوں کے معاملے پر اتفاق ہو جائے گا۔

واضح رہے کہ وزیراعظم عمران خان بروز منگل سعودی عرب کا پہلا دورہ کریں گے ۔ واضح رہے کہ اس سے قبل معروف صحافی حامد میر کے مطابق مغربی میڈیا کے پراپیگنڈا کو زائل کرنے کیلئے عمران خان آنے والے دنوں میں چین اور سعودی عرب کا دورہ کریں گے، دوروں کے دوران حکومت کونرم شرائط پر اربوں ڈالرز کی امداد ملنے کا امکان ہے۔ پاکستان کی معیشت کے زبوں حالی اور زرمبادلہ ذخائر میں تشویش ناک کمی کے باعث سعودی عرب اور چین نے پاکستان کی مدد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ذرائع کے مطابق خاص طور پر سعودی عرب کی حکومت پاکستان کی نئی حکومت کی مدد کرنے کیلئے تیار ہے۔ ذرائع کے مطابق سعودی عرب کی حکومت پاکستان کے زرمبادلہ ذخائر کی صورتحال بہتر بنانے کیلئے نرم شرائط پر 10 ارب ڈالرز کا قرضہ دینے کیلئے تیار ہے۔اس حوالے سے معروف صحافی و اینکر حامد میر نے نجی ٹی وی چینل کے پروگرام سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا ہے کہ وزیراعظم عمران خان مغربی میڈیا کے منفی پراپیگنڈا کو زائل کرنے کیلئے آئندہ چند روز میں چین اور سعودی عرب کے اہم دورے کریں گے۔

حامد میر کے مطابق وزیراعظم عمران خان سعودی عرب اور چین کے دوروں کے دوران کئی اہم معاملات طے کریں گے۔ وزیراعظم دورہ چین کے دوران سی پیک سے متعلق شکوک و شبہات دور کریں گے۔جبکہ سعودی عرب کے دورے کے دوران سعودی حکومت پاکستان کو 10 ارب ڈالرز کی رقم پاکستان کے اکاونٹ میں رکھنے کی پیش کش کرے گی۔ حامد میر کے مطابق آنے والے دنوں میں خارجی معاملات سے متعلق تمام شکوک و شبہات دور ہو جائیں گے اور پاکستان کے چین اور سعودی عرب کے ساتھ تعلقات مزید مضبوط ہوں گے۔ واضح رہے کہ وزیراعظم عمران خان وزارت عظمیٰ کا عہدہ سنبھالنے کے بعد اپنا پہلا سرکاری غیر ملکی دورہ سعودی عرب کا کریں گے۔ جبکہ وزیراعظم نومبر میں چین کا بھی اہم دورہ کریں گے۔