نوکریاں ہی نوکریاں، نئی حکومت نے اہم ترین شعبے میں ہزاروں بھرتیوں کا اعلان کرکے بڑی خوشخبری سنا دی

لاہور (نیوزڈیسک) پنجاب کے سرکاری کالجز میں لیکچررز،اسسٹنٹ پروفیسرز ،ایسوسی ایٹ پروفیسرز اورپروفیسرز کی3570 آسامیاں خالی ہیں۔ہائر ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ کے اعدادوشمار کے مطابق اسوقت پبلک سیکٹرکالجز میں گریڈ17میں لیکچررزمردانہ کی1078 ، لیکچررززنانہ کی840،گریڈ18میں اسسٹنٹ پروفیسرزمردانہ کی480، اسسٹنٹ پروفیسرزنانہ کی420 ،گریڈ19میں ایسوسی ایٹ پروفیسرزمردانہ کی210،ایسوسی ایٹ پروفیسرز زنانہ کی197 ، گریڈ 20 میں پروفیسرزمردانہ کی31اورپروفیسرززنانہ کی43آسامیاں گزشتہ کئی سالوں سے خالی ہیں۔ایچ ای ڈی کے ذرائع نے بتایا کہ پنجاب بھر کے مردوخواتین کالجز میںمختلف گریڈزکی منظور شدہ آسامیوںکی کل تعداد 19092ہے،

جن میں 14187آسامیوں پرماہرین تعلیم خدمات سر انجام دے رہے ہیں جبکہ 4906 آسامیاںتاحال خالی ہیں۔سیکرٹری ہائیر ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ پنجاب خالد سلیم نے اس سلسلے میں اے پی پی کو بتایا کہخالی آسامیوں کی سمری وزیر اعلیٰ پنجاب کو ارسال کردی ہے،چیف منسٹر کی منظوری کے بعد پبلک سروس کمیشن کے ذریعے بھرتی کا عمل شروع کردیا جائیگا۔انہوںنے بتایا کہ کالجز میںتدریسی معاملات کو احسن انداز سے چلانے کیلئے محکمہ ہائیر ایجوکیشن نے کالج ٹرینی انٹرنی(سی ٹی آئی) کو ایک سال کیلئے بھرتی کیا گیا ہے،جوسرکاری کالجز میں پڑھائی کے معاملات کو احسن انداز سے سرانجام دے رہے ہیں۔