عمران خان سے مبینہ تعلقات پر خواجہ سرا نے خاموشی توڑ دی

اسلام آباد (اُردو نیوز ڈیسک) وزیراعظم عمران خان کی دوسری سابقہ اہلیہ ریحام خان نے اپنی کتاب میں عمران خان اور ان کے قریبی ساتھیوں سے متعلق کئی انکشافات کیے۔ ان انکشافات پر کئی تنازعات بھی پیدا ہوئے لیکن سب سے بڑا دعویٰ جو ریحام خان کی واٹس ایپ پر گردش کرنے والی کتاب میں عمران خان کی ذاتی زندگی کے بارے میں کیا گیا تھا، وہ یہ کہ عمران خان نے خواجہ سرا ماڈل کے ساتھ تعلقات ہیں۔

تاہم اب اس حوالے سے مذکورہ خواجہ سرا ماڈل رمل علی کا بیان بھی سامنےآیا ہے ۔ سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس بُک پر اپنے ویڈیو پیغام میں رمل علی نے کہا کہ میں اس خبر کے بارے میں صرف اتنا ہی کہوں گی کہ اس طرح کی خبروں کی تصدیق کر لینی چاہئیے اور بغیر تصدیق ایسے ہی خبروں کو نشر نہیں کرنا چاہئیے۔ اگر آپ کو میرے بارے میں کچھ بھی پتہ چلا ہے،تو سب سے پہلے مجھ سے بات کی جانی چاہئیے۔

رمل علی نے کہا کہ مجھے بات کا علم نہیں ہے کہ یہ کتاب کس کی ہے اور اس کا مصنف کون ہے؟ اور کس نے پبلش کی ہے، پاکستان میں اس قسم کی اشاعت کہاں ہو رہی ہے؟ ایسے مواد کی اشاعت کے لیے کون اجازت دیتا ہے؟ میں اور میرے خاندان کو اس طرح کی باتوں سے بے حد دُکھ ہوا۔ میری تمام میڈیا سے گذارش ہے کہ وہ اپنی سیاست اور خبروں سے مجھے دور رکھیں۔ میں ایک عام انسان ہوں، جس نے اس انڈسٹری میں اور ملک میں اپنی کمیونٹی کے حوالے سے ایک عزت بنائی ہے اور میں چاہتی ہوں کہ میری عزت نفس کو کوئی ٹھیس نہ پہنچائے۔

میں نہیں چاہتی کہ ایسی کوئی جھوٹی خبر میری ساکھ کو متاثر کرے ، اُمید کرتی ہوں کہ تمام میڈیا چینلز کو یہ بات سمجھ آجائے گی۔ رمل علی کا سوشل میڈیا پر جاری کیا گیا یہ ویڈیو پیغام آپ بھی ملاحظہ کیجئیے:

یاد رہے کہ ریحام خان کی واٹس ایپ پر لیک ہوئی مبینہ کتاب میں تحریر کیا گیا کہ ایک مرتبہ ایک خاتون صحافی مجھ تک پہنچنا چاہتی تھی،وہ بہت جلدی میں تھی۔میں اس وقت ایک میٹنگ میں تھی لیکن چونکہ وہ خاتون صحافی مجھے کچھ معلومات دینا چاہتی تھی اس لیے میں اس سے ملاقات کرنے کے لیے کچھ وقت نکال لیا۔

خاتون صحافی کو سانس چڑھا ہوا تھا اور وہ مجھے بتا رہی تھیں کہ فلمسٹار ریشم نے مجھ سے رابطہ کیا اور مجھے بتایا کہ رمل نامی خواجہ سرا کو عمران خان کی خدمات کے لیے پیش کیا گیا ہے۔ مجھے اس بات سے اتنی حیرانی نہ ہوئی جس کی وجہ سے خاتون صحافی بھی پریشان ہو گئی۔اور مجھے سندھی زبان میں گالیاں دینے لگ گئیں کہ میں کیسی خاتون ہوں جو اپنے شوہر سے متعلق پہلے سے ہی ایسی باتوں سے متعلق جانتی ہوں۔

واضح رہے کہ ریحام خان کو ان کی کتاب اور اس کتاب میں کیے گئے انکشافات پر کافی تنقید کا سامنا بھی کرنا پڑا ہے۔