وہ یورپی مُلک جس کی پارلیمنٹ نے خود ہی فوج سے مُلک میں مارشل لاء لگانے کی درخواست کردی

دنیا میں کچھ ایسے ملک بھی ہیں جن کی جمہوری حکومتوں کو ہمہ وقت دھڑکا لگا رہتا ہے کہ کہیں کوئی طالع آزما ان کا تختہ الٹ کر مارشل لاء ہی نہ لگا دے لیکن آپ یہ سن کر دنگ رہ جائیں گے کہ یوکرین کی جمہوری حکومت نے خود فوج سے درخواست کر دی ہے کہ وہ ملک میں مارشل لاء لگا دے ۔ میل آن لائن کے مطابق فوج سے یہ درخواست یوکرین کے صدر پیٹرو پوروشنکو نے کی ہے ، جس میں انہوں نے کہا ہے کہ فوج 30 دن کے لیے ملک میں مارشل لاء نافذ کر دے ۔

رپورٹ کے مطابق صدر پیٹرو کی طرف سے فوج کو یہ درخواست روس کی طرف سے ممکنہ حملے کے خطرے کے پیش نظر کی گئی ہے ۔ گزشتہ دنوں روسی فوج نے ہلہ بول کر یوکرین نیوی کے 3 بحری جہاز قبضے میں لے لیے تھے ۔ روسی فوج کے اس اقدام پر یوکرین میں شدید خوف پایا جا رہا ہے اور حکومت اور عام شہریوں کا بھی خیال ہے کہ اب روس ان کے ملک پر حملہ کرنے والا ہے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں